اے ای میں پٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں کے حوالے سے اہم اعلان ہو گیااماراتی حکومت نے ماہ جنوری 2020ء کے دوران پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ نہ کرنے کی خوش خبری دے دی

متحدہ عرب امارات میں کورونا وبا کے باعث اگرچہ معاشی سرگرمیاں خاصی حد تک بحال ہو گئی ہیں، تاہم ابھی تک لاکھوں افراد کئی ماہ کی معاشی پریشانی سے باہر نہیں نکل پائے۔ ہزاروں افراد بے روزگار ہیں اور کئی افراد کی تنخواہوں میں کمی کر دی گئی ہے۔لوگوں کی مشکلات کو پیش نظر رکھتے ہوئے اماراتی حکام نے اعلان کیا ہے کہ اگلے سال کے پہلے مہینے یعنی جنوری 2021ء کے دوران پیٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں کوئی اضافہ نہیں کیا جا ئے گا۔
جنوری 2021ء کے مہینے میں پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں ماہ دسمبر کی سطح پر ہی برقرار رکھیں جائیں گی۔ اس طرح جنوری کے مہینے میں بھی سپر 98 پیٹرول 1.91درہم فی لیٹر پر فروخت ہو گا، جبکہ سپیشل 95 پیٹرول کی فی لیٹر قیمت 1.80 درہم ہو گی۔
ڈیزل کی قیمتیں بھی ماہ دسمبر والی ہی ہوں گی یعنی ڈیزل 2.06 درہم فی لیٹر میں دستیاب ہو گا۔ روا ں سال اپریل میں پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں رد و بدل کیا گیا تھا، اس کے بعد مسلسل کئی ماہ مئی، جون ، جولائی ، اگست ، ستمبر، اکتوبر ، نومبر اور دسمبر میں پیٹرول اور ڈیزل کی قیمتوں میں کوئی تبدیلی نہیں کی گئی۔
پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتیں برقرار رکھنے پردُبئی میں مقیم ایک پاکستانی اعظم خان کا کہنا تھا کہ کورونا کی وبا کے باعث لاکھوں تارکین بے روزگار ہو چکے ہیں، یا پھر ان کی تنخواہوں میں کمی کی جا چکی ہے۔ اطمینان کی بات یہ ہے کہ اماراتی حکومت نے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اس بار بھی کوئی اضافہ نہیں کیا۔ مگر موجودہ معاشی بحران کو دیکھتے ہوئے تارکین وطن کو ریلیف دینا بہت ضروری ہے۔
اس مقصد کے لیے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں کمی کرنی چاہیے تاکہ لوگوں کو ٹرانسپورٹ کی مد میں رقم بچانے کا موقع مل سکے۔ واضح رہے کہ دو ماہ قبل اماراتی حکومت نے گھریلو ایل پی جی قیمتوں میں بہت بڑا ریلیف دیتے ہوئے اس کے نرخ 24 فیصد کم کردیئے تھے۔ ایل پی جی سستی کرنے کا مقصدپریشانی میں گھرے افراد کو بڑا ریلیف دینا ہے اور ان کے معیار زندگی کو بہتر بنانا ہے۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *